33

پلیٹلیٹس 6000 پر گرتے ہی نواز کی طبیعت ایک بار پھر خراب ہوئی

میاں محمد نواز شریف کی طبیعت گزشتہ روز سنبھلی تھی اور پلیٹ لیٹس کی تعداد 29 ہزار کے قریب پہچ گئی تھی جس کے بعد ڈاکٹروں نے سابق وزیراعظم کی صحت کو بہتر قرار دیا تھا۔

پروفیسر محمود ایاز کا کہنا تھا کہ نواز شریف کے پلیٹ لیٹس کی تعداد 29 ہزار ہوگئی، آئندہ اجلاس میں سابقہ ٹیسٹ رپورٹس نئی ادویات کا جائزہ لے گا، نواز شریف کے مزید ٹیسٹ سے متعلق بھی بورڈ فیصلہ کرے گا، نواز شریف کے علاج کے لئے تین شفٹوں میں 21 ڈاکٹرز نواز شریف کے علاج کے لئے خدمات سرانجام دے رہے ہیں۔

ذرائع کے مطابق اب ایک مرتبہ پھر سابق وزیراعظم میاں محمد نواز شریف کی طبیعت ناساز ہو گئی ہے، سروسز ہسپتال میں زیر علاج مسلم لیگ ن کے تاحیات قائد کے پلیٹ لیٹس کی تعداد ایک مرتبہ پھر کم ہو کر 7ہزار پر پہنچ گئی۔

میڈیکل بورڈ کے اعلیٰ حکام کو بریفنگ میں بتایا گیا ہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف کی حالت انتہائی تشویشناک ہے، ان پلیٹ لیٹس کی تعداد کم ہوکر پھر 7 ہزار رہ گئیِ، میڈیکل بورڈ کی سفارش پر اسلام آباد سے ایک سینئر ڈاکٹرکو بلالیا گیا۔

مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ ہمارے لیڈر نواز شریف کی صحت بہتر ہو رہی ہے، بیرون ملک جانے میں صداقت نہیں۔

ادھر مسلم لیگ ن کی رکن سعدیہ تیمور نے پنجاب اسمبلی میں قرار داد جمع کرا ئی ہے۔ قرارداد میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ مریم نواز کو نواز شریف سے ملاقات کیلئے پرول پر رہا کیا جائے۔

دوسری طرف محکمہ داخلہ پنجاب نے نیب کی درخواست پر سابق وزیر اعظم کی سکیورٹی بڑھا دی ہے، وی وی آئی پی وارڈ میں سی سی ٹی وی کیمرے لگا دئیے گئے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں